تبصرہ کیجیے

بیسی ڈالتے جائیے

پچھلے چار سالوں میں چار بجٹوں کی سونامیاں آئیں اور منی بجٹوں کے نام پر مہنگائی کے بیسیوں سائیکلون آئے مگر اس طوفانی رفتار سے بڑھتی ہوئی مہنگائی کے باوجود کراچی ایرپورٹ کے ٹریفک پولیس والوں نے اپنا بھاؤ ٹس سے مس نہیں ہونے دیا۔ ان عقابوں میں چوکسی ایسی ہے کہ مجال ہے کوئی کالی پیلی ٹیکسی والا ان کی عقابی نظروں سے بچ کر ان کی بیسی لیکر بھاگ جائے آئے۔ ممکن ہی نہیں کہ کالی پیلی ٹیکسی والا قائداعظم ایر پورٹ پر آئے اور یہاں کے محافظین کو قائداعظم کے درشن سے محروم رکھے؟ ان قائد کے متوالوں کو پچھلے چار سالوں سے تو میں دیکھ رہا ہوں اور یقیناً یہ دھندہ کافی عرصے سے جاری ہی ہوگا ورنہ اتنی مہارت اور شہرت جمعہ جمعہ آٹھ دن میں تو پیدا نہیں ہوسکتی۔ شہر میں کسی ٹیکسی والے سے بھاؤ تاؤ کریں وہ یہی کہے گا کہ بیس روپے تو انکو دینے پڑتے ہیں پھر وہاں سے سواری بھی نہیں اٹھا سکتے۔
اس بات میں شبہ نہیں کہ ریڈیو کیب کی سروس ہی اکنامیکل اور با سہولت رہتی ہے لیکن اب یہ تو ممکن نہیں ہے کہ ہر وقت ریڈیو کیب دستیاب ہو بعض اوقات جلدی جانا ہوتا ہے اور ٹریفک جام کے چکر میں ریڈیو کیب والے زیادہ وقت مانگتے ہیں تو سوائے پرائیویٹ ٹیکسی کے کوئی آسرا نہیں ہوتا ہوٹل کی رینٹ اے کار والے ایک دفعہ بیٹھ کر اترو تو 800 روپے اینٹھ لیتے ہیں ٹپ کے علاوہ ۔
ایر پورٹ پر کتنی سیکوریٹی اور چوکسی ہوتی ہے پارکنگ تک کی نگرانی کیمروں اور سادہ لباس اہل کاروں کے ذریعے کی جاتی ہے۔ کیا ایسا ممکن ہے کہ یہ منظم بھتہ خوری ان اہل کاروں اور حکام کی نظر میں نہیں ہے۔ جونہی ٹیکسی رکتی ہے پولیس والا چہرے پر خشونت لیے ٹیکسی ڈرائیور سے مصافحہ کرنے آ موجود ہوتا ہے اور پھر مصافحہ والا ہاتھ پینٹ کی جیب میں چلا جاتا ہے جو پاپن پیٹ کی طرح پھولتی چلی جاتی ہے۔ اگر یہ ساری کاروائی حکمران بالا کے علم میں نہیں ہے تو اُن سے بڑے نااہل کوئی نہیں ہیں اور ایسے بے خبر حکمرانوں کے زیرِ سایہ کوئی بھی شہری محفوظ نہیں ہے۔ اگر ان کے علم میں ہے اور اس میں سے باقاعدہ حصہ ان تک جاتا ہے تو پھر ہم ان کا کیا بگاڑ سکتے ہیں؟ ہمارے صوبے کے حکمرانوں پر تو کرم و نوازش کی برسات ہے خانہ کعبہ کا در بھی ان ہی پر وا ہوتا ہے!!!!!

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Connecting to %s

%d bloggers like this: