8 تبصرے

ایک SPAMMER کا پیغام، شاید آسکے آپکے کام

 میرے کسی پیغام کے جواب میں یہ تبصرہ موصول ہوا تھا بلا کم و کاست پیش خدمت ہے ۔ ( جس گھر میں بیری ہو وہاں پتھر تو آتے ہیں یا جہاں پتھر ہوں وہاں؟؟؟؟؟ :smile: )

مسلمانوں میں مقبول عام ہوتی ویب سائٹ www.inikah.com شادی کی اہمیت وافادیت پر کسی فرد کو کلام نہیں ، شادی کے بعد ایک نئی زندگی کی شروعات تصورکی جاتی ہے، اس کے بغیر سماجی زندگی کاتصور نہیں کیاجاسکتا، معاشرے کی ترقی اور فلاح وبہبود اسی میں پنہا ہے، اسی سے خاندانوں میں پروان چڑھتا ہے،اور معاشرے کی تشکیل ہوتی ہے، اس کے بغیر برائیوں اور بے حیائیوں کے راستے کھلتے ہیں۔ آج سب سے اہم مسئلہ یہ ہے کہ کسطرح اس خوبصورت لمحہ کو یادگار اور کامیاب بنایاجائے،کیوں کہ موجودہ دور میں اپنے پسند کے رشتے تلاش کرنابہت مشکل امر ہے، کچھ لوگ رشتہ طے کرانے کا کام انجام دے رہے ہیں ،لیکن اس سماجی اور دینی کام کومشاطہ حضرات نے ایک کاروبار ی شکل دے دی ہے،ایک رشتہ طے کرانے کیلئے اتنے پیسوں کامطالبہ کیاجاتاہے جو ایک عام آدمی اس کی استطاعت نہیں رکھتا، کچھ پڑھے لکھے طبقہ انگریزی اخباروں اور غیر اسلامی ویب سائٹس کاسہارا لیتے ہیں تو ایسی صورت میں غیر مسلم خاندانوں کی طرف سے بھی فون کالز آنے لگتے ہیں ، رشتے طے کرانے کیلئے کئی ویب سائٹس ملک و بیرون ملک کام انجام دے رہے ہیں لیکن ان سب میں لڑکیوں کی تصویروں کی زیادہ سے زیادہ نمائش کیجاتی ہے، اور ان کابیجا استعمال کیاجاتا ہے،اس طرح کے ویب سائٹس آج کل صرف تفریح و طبع کیلئے دیکھا جاتاہے، جہاں اسلامی شریعت کا کو ئی پاس و لحاظ نہیں کیا جاتا ، ان تمام صورت حال کو مد نظر رکھتے ہوئے بنگلور کی ایک مسلم سافٹ ویئر کمپنی online mPower labs (p) ltd نے دنیاکا سب سے پہلی اسلامک ویب سائٹ iNikah.com کے نام سے تشکیل دی ہے جو اپنی تشکیل کے روز اوّل ہی سے اسلامی تعلیمات کی روشنی میں مسلمان لڑکے ولڑکیوں کے رشتے طے کرانے کی خدمات سرانجام دے رہی ہے جس سے ایک سال کے مختصر عرصہ میں ملک وبیرون ملک کی ایک کثیر تعداد استفادہ کرچکی ہے۔الحمدللہ http://www.iNikah.com کے آغاز کا مقصد مسلم سماج میں شادی بیاہ کے حوالے سے موجودہ سماجی برائیوں کو ختم کرتے ہوئے شادی کے لائق مسلم نوجوان لڑکے و لڑکیوں کیلئے اپنی پسند کے رشتے کو آسان عمل بناکر پیش کرنا ہے ۔ http://www.iNikah.com کی خصوصیات یہ ہیں کہ بنیادی طور پر اسلامی تشخص کالحاظ رکھا گیا ہے ۔ اس ویب سائٹ پر لڑکیوں کی تصاویر موجود ہیں لیکن ان کا مشاہدہ اس وقت تک نہیں کیا جاسکتا جب تک کہ لڑکی کے سرپرست اس کی اجازت نہ دے دے، جب کہ دیگر رشتے لگانے والی ویب سائٹس میں ایسا کچھ نہیں ہے، نتےجتا لڑکیوں کی تصاویر لوگ تفریح و طبع اور بے مقصد بھی دیکھتے ہیں جب کہ iNikah.com میں لڑکے والے کسی لڑکی کا بائیو ڈاٹا دیکھنے کے بعد لڑکی کی تصویر دیکھنا چاہتے ہیں تو انہیں اپنا بائیو ڈاٹا بتلاتے ہوئے لڑکی والو ں کا وہ پاس ورڈ حاصل کر نا ہوتا ہے جس کو ٹائپ کر نے کے بعد ہی لڑکی کی تصویر تک رسائی ہوتی ہے۔ iNikah.com کے ذریعہ لڑکی ڈھونڈنے والے لڑکوں اور ان کے سرپرستوں سے یہ ضمانت لیتی ہے کہ وہ جہیز کامطالبہ نہ کریں ۔ شادی طے ہوجانے کے بعد دوران شادی بے دریغ مال خرچ نہ کریں۔ شادی میں ہونے والی برائیوں کو ختم کرنے کا عہد کریں۔ چونکہ ترقی کے اس دور میں جس طرح دنیا کی ساری چیزوں میں تغیرات ہوئے اور ہورہے ہیں اسی طرح شادی کے سلسلے میں نوجوان طبقہ کے خیالات بھی بدلتے جارہے ہیں ،عام طور پر ہندوستانی لڑکوں کو تعلیم یافتہ اور خوبصورت لڑکیوں کی تلاش رہتی ہے ،تو لڑکیاں ایسےشوہر کی تلاش میں رہتی ہیں جن کی معاشی حالات مستحکم ہوں اوراسلامی تعلیمات سے آراستہ ہوں تاکہ اپنی بیوی کے صحیح حقوق ادا کرسکے، شاید اسی لئے ردا خانم نے اپنی بیٹی کیلئے http://www.inikah.com نامی ویب سائٹ پر رجسٹر کرایا ،کیونکہ یہ ویب سائٹ نہ صرف رشتہ طے کراتی ہے ، بلکہ اسلامی شریعت کے مطابق بنائی گئی یہ ویب سائٹ جہیز جیسی بری لعنت سے بچنے کا عہد بھی لیتی ہے،اس ویب سائٹ کا دعوٰی ہے کہ ان کی بھر پور کوشش سے ایک بہترین ہمسفر مل سکتا ہے۔www.inikah.com کے(چیف ایکزیکٹیو آفیسر)احمد حسن کا کہنا ہے کہ ہندوستان میں عام آدمی کیلئے انٹرنیٹ پر رشتے تلاش کرنا اب معمولی بات ہے۔ ہندوستان میں آئی ٹی کے ماہرین نہ صرف ملازمتوں کی مارکیٹ میں مقبولیت حاصل کررہے ہیں بلکہ شادیوں کیلئے بھی انہیں سب سے زیا دہ ترجیح دی جاتی ہے۔ آئی نکاح ڈاٹ کام سے مسلمانوں کی دلچسپی کو دیکھتے ہوے کمپنی کے c.e.o. احمد حسن کا کہنا ہے کہ ” ان شاءاللہ آنے والے دوتین مہینوں کے اندر اس ویب سائٹ میں اردو ،عربی اور ہندی زبان کی سہولیات فراہم کئے جائیں گے۔ “ iNikah.com ملک کے بڑے بڑے شہروں میں سمپل نکاح پوائنٹس کی شروعات کرچکی ہے، جن کے ذریعہ جنہیں انٹر نیٹ کے استعمال سے شناسائی نہیں ہے وہ بھی اپنے رشتوں کا رجسٹریشن آف لائن کراسکیں گے۔ iNikah.com ایک اچھی شروعات ہے جس کی ستائش کی جانی چاہئے۔ ہیڈآفس نمبر 42 ، نندی درگا روڈ بنگلور 46، انڈیا۔91 080-41289572،41285440،009945631954 از: محمد تنویر عالم قاسمی http://www.inikah.com

8 comments on “ایک SPAMMER کا پیغام، شاید آسکے آپکے کام

  1. سلام
    یہ سپیم ہے اور میرے کم و بیش 4،5 ماہ پرانے پوسٹ پر لکھا گیا تھا۔ چونکہ مجھے کسی خصوصی رعائیٹ کا نہیں بتایا گیا تھا تو میں نے پہلی فرصت میں اس کو ڈیلیٹ کر دیا۔ 😈

  2. بدتمیز تمہیں کس قسم کی رعایت کی توقع تھی؟؟

    منیر بھائی کافی محنتی اور اسلامی سپامر لگتا ہے، لمبے لمبے اور متنوع پیغامات بھیجنے والا۔

  3. میرے بلاگ پر ان صاحب کے تین چار پیغام آ چکے ہیں ۔ ایک میں کہا گیا تھا کہ میں اسے پوسٹ کروں ۔ باوجود اسکے کہ مجھے کافی معاوضہ کا وعدہ کیا جاتاہے میں کوئی اشتہار اپنے بلاگ پر نہیں آنے دیتا اسلئے اسے پوسٹ نہیں کیا ۔

  4. میں بھی اسے اپنے بلاگ سے اسے سپردِ خاک کرچکا ہوں.. اگرچہ تقریر اچھی ہے مگر کیا ہی اچھا ہوتا اگر یہ لوگ یہ اوچھا ہتھکنڈا استعمال کرنے کی بجائے بذریعہ اشتہارات اپنی تشہیر کرتے، سپیمرز کو اچھی نظر سے نہیں دیکھا جاتا اس طرح ان کی اس ویب سائٹ کا غلط تاثر ابھرے گا اور جو ابھر بھی رہا ہے.. سدھرنے کے لیے ان کے پاس اب بھی وقت ہے.. باقی اللہ کی مرضی.

  5. ہمم
    اگر ایسا ہے پھر تو ایک اچھی کوشش ہے۔

  6. اجمل صاحب مجھے پہلے علم ہوتا تو ان صاحب سے معاوضہ طے کرتا چلیں پھر صحیح، انہوں نے کونسی اپنی خو بدلنی ہے۔ ابھی تک دوائی والے پیغامات مجھے آتے رہتے ہیں اب انہیں کون سمجھائے کہ بات دواؤں کے بس سے نکل چکی ہے۔🙂
    مکی خوش آمدید انکا بھی ماٹو “ محبت اور تجارت میں سب کچھ جائز ہے“۔ والا لگتا ہے۔

    شاکر یہ ہوئی نا بات لگتا ہے تم ممبر بنو گے۔ 😉

  7. جیسے لائف ٹائم فری ممبرشپ۔ ماسٹر پاسورڈ کہ بھیا جہاں مرضی لگاتے پھرو حتہ کہ ایڈمن صاحب کے اکا؂نٹ کو بھی لگا ڈالو۔
    شادی ہو جانے کے بعد بھ پروفائل نہ صرف ایکٹو رہے بلکہ اس میں تازہ ترین واردات کا سراغ تک نہ ہو وغیرہ وغیرہ۔ 😈

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Connecting to %s

%d bloggers like this: