6 تبصرے

آمر اور ملا نے ملکر میرے وطن کی شامت لائی

آج کچھ سیز فائر ہوا ہے لیکن عجیب بات ہے ایک بے یقینی کا عالم ہے، وادی سوات کے باسی اپنے بھرے پُرے گھر چھوڑ کر بد امنی لڑائی والے علاقے سے دور جانا چاہتے ہیں،
 شاید انہیں ڈر ہے کہ ابھی آسمان سے مزید آگ برسے گی۔
 زمین سے اور بھی بارود پھوٹے گا۔
باقی وطن میں ایک عجیب سی بے تعلقی ابھی تک ہے
کچھ چینل سوات کا ماضی دکھارہے ہیں کہ کچھ ماہ پہلے تک یہ جنت نظیر خطہ دنیا بھر کے سیاحوں کے لیے ایک پر کشش مقام تھا آج کا سوات صرف دارُلاموات ہے۔
احمد فراز لاہور میں چِلا رہے ہیں اہلِ پنجاب اٹھو اہلِ پاکستان اٹھو اس موت کے رقص کو بند کرواؤ۔
لیکن بلوچستان کی طرح وزیرستان کیطرح ٹانک کیطرح سوات میں بھی بس اب
دن بھر ریاست گردی ہوگی اور رات کو مُلا گردی ہوگی۔
 یہ سب ایک دن میں نہیں ہوا
اس سب کی تاریخ بہت پرانی ہے
کسی مغربی متعصب کی نہیں بلکہ اپنوں کی زبانی سن لو
 اوریا مقبول جان صاحب بھی ایکسپریس میں یہی کہتے ہیں  
میں اس سلسلے کو اکیلا ہی افغانستان سے نہیں جوڑتا سب ہی یہی کہتے ہیں
 یہ آج کا قصہ نہیں ہے یہ ملا کی سرشت میں شامل ہے اور
آج کا آمر  مکرو فریب کے شیخ فضلو جیسوں سے ملکر ہی ہمارے معاشرے کی تاروپود بکھیر رہا ہے۔
سچ تو پھر یہی ہے کہ ہم کیا کریں
 آگے کھڈا پیچھے کھائی
آمر اور ملا نے ملکر میرے وطن کی شامت لائی
 

6 comments on “آمر اور ملا نے ملکر میرے وطن کی شامت لائی

  1. aap kee baat bilkul thek hai..mullah aur military aik he hain aur jab aik ko zaroorat hotee hai to doosra uskee madad karta hai…yahya khan kay zamana say aisa hee chala aaraha hai.

  2. ملا اور فوجی ڈالر بٹورنے کی ہوس میں‌ پاگل ہوئے جاتے ہیں۔ جہاں‌ ایک طرف ہم نیوزویک پر دنیا کا خطرناک ترین ملک قرار دئے جانے پر پریشان ہیں‌ وہاں‌ یہ لوگ بغلیں‌ بجارہے ہونگے کہ اب مغرب کو اس خطرے کا ڈراوا دے کر اور ڈالر بٹوریں‌ گے۔ ہماری عوام کو اس بات کا ادراک کرنا ہوگا کہ جمہوریت (بھلے بدعنوان اور بد انتظام ہی سہی) اور تعلیم ہی ان کی نجات کا ذریعہ ہیں۔

  3. جمہوریت اور تعلیم
    پھر خوانین ، مَلِک اور مُلا کو بھی محنت کرنی پڑے گی چہ چہ چہ

  4. […] اسی سلسلے کی کڑی اکتوبر ٢٠٠٧ میں لکھا گیا ایک بلاگ۔ […]

  5. ہم تو ایک دعا ہی کر سکتے ہیں ‘ سو کیے جا رہے ہیں۔ آللہ ان بےچاروں کی مصیبت آسان فرمائے/ آمین

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Connecting to %s

%d bloggers like this: